تصویر میں ایک سرنج کے ساتھ ساتھ کورونا وائرس ویکسین کی ایک شیشی دکھائی جارہی ہے جبکہ دوا ساز کمپنیوں فائزر اور بائیو ٹیک ٹیک کے لوگو اس پس منظر میں دیکھے جاسکتے ہیں۔ فوٹو: اے ایف پی
  • پاکستان کو فائزر ویکسین کی ایک اور کھیپ موصول ہوئی۔
  • پاکستان کو چین کی سائنوفرم ویکسن کی 0.7 ملین خوراکیں بھی ملتی ہیں۔
  • یہ کھیپ وفاقی محکمہ صحت کے حوالے کردی گئی ہے۔

اسلام آباد: نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے) نے بدھ کے روز تصدیق کی کہ فائیزر کورونا وائرس ویکسین کی ایک اور کھیپ اسلام آباد پہنچ گئی۔

ترجمان این ڈی ایم اے کے مطابق یہ کھیپ وفاقی محکمہ صحت کے حوالے کردی گئی ہے۔

ادھر ، این ڈی ایم اے نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر اعلان کیا کہ ، بدھ کے روز بھی ملک کو چین کی سائنوفیم ویکسین کی 0.7 ملین خوراکیں موصول ہوئی ہیں۔

مئی میں پاکستان کو کووایکس سہولت کے ذریعے فائزر کورونویرس ویکسین کی ایک لاکھ سے زائد خوراکیں ملی تھیں۔ خوراکیں یونیسف کی مدد سے ملک تک پہنچ گئیں۔

کووایکس ایک عالمی سطح پر ویکسین بانٹنے والا پروگرام ہے جس کی سربراہی میں ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن ، گیوی ویکسین الائنس ، اور انسداد مہاماری تیاری انوویشنس (سی ای پی آئی) کے تعاون سے ہے۔

وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا تھا کہ صرف کمزور مدافعتی نظام رکھنے والے افراد کو فائزر کی COVID-19 ویکسین پلائی جائے گی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *