کہا جارہا ہے کہ وفاقی بجٹ 2021-22 میں چھوٹی کاریں اور موٹرسائیکلیں ارزاں ہوجانے کے امکانات آج (جمعہ کو) قومی اسمبلی میں پیش کیے جارہے ہیں۔

اسے وزیر خزانہ شوکت ترین نے پیش کیا۔

ذرائع کے مطابق ، بجٹ میں 850 سی سی سے کم گاڑیوں پر ٹیکس کم کرنے کی تجویز دی جائے گی۔

ذرائع نے بتایا کہ چھوٹی گاڑیوں پر سیلز ٹیکس ، ایکسائز ڈیوٹی اور اضافی کسٹم ڈیوٹی کو کم کرنے کی تجویز پر بھی غور کیا جارہا ہے۔

اس کے علاوہ مختلف برانڈز کی نئی موٹرسائیکلوں اور ٹریکٹروں کے نئے ماڈلز پر بھی ٹیکس کم کرنے کی تجویز دی جاسکتی ہے۔

پاکستان میں آٹوموبائل بنانے والی کمپنیاں گزشتہ چند ماہ میں ڈالر کی شرح میں نمایاں کمی کے باوجود کاروں کی قیمتوں میں کمی کرنے میں ناکام رہی ہیں۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published.