ایک عورت کو کورونا وائرس سے بچاؤ کے قطرے پلائے جارہی ہے۔ – اے ایف پی / فائل
  • پنجاب پانچ شہروں میں گھر گھر جاکر قطرے پلائے گا۔
  • خصوصی مہم 26 جولائی سے لاہور ، فیصل آباد ، گوجرانوالہ ، ملتان اور راولپنڈی میں شروع کی جائے گی۔
  • ہر یونین کونسل میں ویکسین پلانے کے لئے دو موبائل ٹیمیں۔

لاہور (پ ر) حکومت پنجاب نے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر کے طے شدہ اہداف کو پورا کرنے کے لئے صوبہ کے پانچ شہروں لاہور ، فیصل آباد ، گوجرانوالہ ، ملتان اور راولپنڈی میں 26 جولائی سے ڈور ٹو ڈور کورونیو وائرس سے بچاؤ مہم شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ (این سی او سی)۔

یہ فیصلہ ہفتہ کے روز سول سیکرٹریٹ میں صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد اور پنجاب کے چیف سکریٹری کی مشترکہ صدارت میں ہونے والے اجلاس میں کیا گیا۔

وزیر نے اجلاس کو بتایا کہ این سی او سی نے 14 اگست تک لاہور ، فیصل آباد ، گوجرانوالہ اور ملتان میں 18 سال سے زیادہ عمر کی 40٪ اور راولپنڈی کی 70٪ آبادی کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے کا ہدف مقرر کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مزید لوگوں کی سہولت کے لئے لاہور میں ویکسینیشن مراکز کی تعداد میں اضافہ کیا جارہا ہے۔

راشد نے کہا کہ پولیو سے بچنے اور معیاری آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پیز) کی تعمیل ہی کورونا وائرس کو ختم کرنے کا واحد حل ہے۔

پنجاب کے چیف سکریٹری جواد رفیق ملک نے انتظامیہ اور پولیس کو خصوصی مہم کے دوران محکمہ صحت کی ٹیموں کو مکمل تعاون کرنے کی ہدایت کی۔

انہوں نے تمام تدریسی اسپتالوں کے آس پاس ویکسینیشن کیمپ لگانے کی ہدایات بھی جاری کیں۔

پرائمری اور سیکنڈری ہیلتھ کیئر سکریٹری سارہ اسلم نے اجلاس کو بریفنگ میں بتایا کہ محکمہ نے خصوصی ویکسینیشن مہم کے لئے “مائکرو پلان” تیار کیا ہے اور دو یونین ٹیمیں گھر گھر جاکر ویکسینیشن لانے کے لئے ہر یونین کونسل میں کام کریں گی۔

انہوں نے کہا کہ فیصل آباد میں 566 ، گوجرانوالہ میں 224 ، ملتان میں 250 ، راولپنڈی میں 356 اور لاہور میں 528 ٹیمیں تشکیل دی جائیں گی تاکہ لوگوں کے دروازوں پر ویکسین لگائی جاسکے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *