پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز۔ – اے ایف پی / فائل

وفاقی تحقیقاتی ایجنسی نے ہفتہ کے روز پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز کو شوکاز نوٹس بھجوایا جس میں ان سے کہا گیا تھا کہ وہ منی لانڈرنگ کے الزامات کی تحقیقات کرنے پر منی ٹریل فراہم کرے۔

حمزہ کو منی ٹریل کیلئے معاون دستاویزات فراہم کرنے کے لئے 30 دن کا وقت دیا گیا ہے۔ مقررہ مدت میں ایسا کرنے میں ناکامی کے نتیجے میں اس کی جائیداد حکومت کے قبضے میں ہوجائے گی۔

نوٹس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ حمزہ کو ماہ کے اختتام تک ایف آئی اے کے سامنے پیش ہونا ضروری ہے۔

اسے ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنے ساتھ موجود گاڑیوں ، اس کے بینک اکاؤنٹ کی تفصیلات ، ملکیت والے حصص ، زیورات ، نقد اور انعامی بانڈ سے متعلق دستاویزات اپنے ساتھ لائیں۔

پیروی کرنے کے لئے مزید.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *