کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ دکھا کر فائل کی مثال
  • نیا نظام خاندانی نظام میں کسی بھی غیر متعلقہ شخص کی رجسٹریشن کی تصدیق یا شناخت کرسکتا ہے۔
  • پاکستان میں غیر قانونی طور پر مقیم غیر ملکیوں کے خلاف نئے نظام کی مدد سے ایک آپریشن شروع کیا گیا ہے۔
  • مصنوعی ذہانت کے ذریعے جعلی شناختی کارڈ کی شناخت کے لیے نئی ٹیکنالوجی استعمال کی جائے گی۔

اسلام آباد: نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا) نے کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ (CNICs) کی تصدیق اور تجدید کا نیا نظام شروع کیا ہے۔

نادرا کے ایک عہدیدار کے مطابق نیا نظام خاندانی نظام میں کسی بھی غیر متعلقہ شخص کی رجسٹریشن کی تصدیق یا شناخت کرسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نئے اقدام کے ساتھ پاکستان میں غیر قانونی طور پر مقیم غیر ملکیوں کے خلاف آپریشن شروع کیا گیا ہے۔ مصنوعی ذہانت کے ذریعے جعلی شناختی کارڈ کی شناخت کے لیے نئی ٹیکنالوجی استعمال کی جائے گی اور رجسٹریشن فوری طور پر منسوخ کر دی جائے گی۔

نئے نظام کے ذریعے پاکستانی شہری اپنے رجسٹرڈ موبائل فون سے 8009 پر ایس ایم ایس بھیج کر خاندان کے افراد کی تفصیلات اور تصدیق حاصل کر سکیں گے۔

عہدیدار نے مزید کہا کہ شہری اپنا CNIC نمبر اور جاری کرنے کی تاریخ 8009 پر بھیج کر مطلوبہ تفصیلات حاصل کرسکتے ہیں۔

جواب میں ، خاندانی درخت کی تمام تفصیلات فراہم کی جائیں گی جبکہ تفصیلات میں تصحیح کرنے کا آپشن بھی موجود ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہری اپنے موبائل نمبر کسی بھی نادرا سنٹر سے رجسٹر کروا سکتے ہیں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *