آئی سی سی کی پریس ریلیز سے لی گئی تصویر

پاکستانی کرکٹر فاطمہ ثناء کو انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے جولائی ویمن پلیئر آف دی ماہ کے ایوارڈ کے لیے نامزد کیا ہے۔

آئی سی سی پلیئر آف دی ماہ کے ایوارڈز کا آغاز رواں سال جنوری میں کیا گیا تھا تاکہ مرد اور خواتین کرکٹرز کے لیے تمام فارمیٹس میں بہترین بین الاقوامی پرفارمنس کو تسلیم کیا جا سکے۔

فاطمہ ثنا کو ویسٹ انڈیز سے ہیلی میتھیوز اور اسٹیفنی ٹیلر کے ساتھ نامزد کیا گیا ہے۔ ثنا ویسٹ انڈیز کے خلاف ون ڈے سیریز میں پاکستان کے لیے سب سے زیادہ وکٹیں لینے والی گیند باز تھیں۔

مردوں کے زمرے میں جولائی کے مہینے کے لیے نامزد افراد میں بنگلہ دیش سے شکیب الحسن ، آسٹریلیا سے مچل مارش اور ویسٹ انڈیز سے ہیڈن والش جونیئر شامل ہیں۔

ہر زمرے کے نامزد افراد کو کھلاڑی کی پرفارمنس کی بنیاد پر کیلنڈر مہینے کے پہلے دن سے آخری دن تک شارٹ لسٹ کیا جاتا ہے۔

شارٹ لسٹڈ کھلاڑیوں کو پھر آئی سی سی ووٹنگ اکیڈمی اور دنیا بھر کے شائقین ووٹ دیتے ہیں۔

آئی سی سی ووٹنگ اکیڈمی معروف صحافیوں ، سابق کرکٹرز ، براڈ کاسٹروں اور آئی سی سی ہال آف فیم کے ممبروں پر مشتمل ہے۔

ووٹنگ اکیڈمی کے ووٹ ای میل کے ذریعے ڈالے جاتے ہیں اور 90 فیصد حصہ رکھتے ہیں۔

آئی سی سی کے ساتھ رجسٹرڈ شائقین آئی سی سی کی ویب سائٹ کے ذریعے ووٹ دیتے ہیں اور ان کے ووٹ باقی 10 فیصد ہیں۔ انعامات کے فاتح کا اعلان ہر مہینے کے دوسرے پیر کو کیا جاتا ہے۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *