اسلام آباد:

سپریم کورٹ نے بدھ کو معطل کردیا۔ سندھ ہائی کورٹ کے حکم اور جینکو ہولڈنگ کمپنی کے سی ای او محمد عمران کو بحال کیا گیا۔

چیف جسٹس گلزار احمد ، جسٹس اعجازالاحسن اور جسٹس محمد علی مظہر پر مشتمل سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے محمد عمران اور پاور ڈویژن کی جانب سے دائر کردہ سروس معاملہ کی اپیل کی سماعت کی۔

کارروائی کے دوران جسٹس احسن نے پوچھا کہ کیا جینکو ہولڈنگ کمپنی کے سی ای او کے عہدے کے لیے انجینئرنگ کی ڈگری شرط ہے؟

انہوں نے پوچھا کہ کیا سی ای او کی ذمہ داری ٹربائن یا ادارہ چلانا ہے اور ایس ایچ سی نے کس قسم کا فیصلہ دیا ہے؟

پڑھیں ملک بھر میں کنڈا کنکشن کیسز میں سکھر سرفہرست ہے۔

عدالتی استفسار کے جواب میں ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا کہ ایس ایچ سی پی آئی اے کے حوالے سے عدالت عظمیٰ کے فیصلے پر انحصار کرتی ہے۔

جسٹس احسن نے پوچھا کہ پی آئی اے کے حوالے سے فیصلے میں یہ کہاں لکھا ہے کہ قومی ایئر لائن کا سربراہ پائلٹ ہوگا کیونکہ پی آئی اے کے سربراہ کا کام طیارہ اڑانا نہیں بلکہ کمپنی کو چلانا تھا۔

چیف جسٹس کی ریمارکس میں کہا گیا کہ ملازمین کا کسی چیف کی تقرری کو چیلنج کرنے سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

عدالت نے دلائل سننے کے بعد جینکو ہولڈنگ کمپنی کے سی ای او کو بحال کرنے کا حکم دیا۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *