فائل فوٹو

کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر تعلیم سندھ سعید غنی نے پیر کو کہا ہے کہ کورونا وائرس سے متعلق صوبائی ٹاسک فورس نے منگل سے کلاس 6- سے 8 تک کے اسکولوں میں ذاتی طور پر سیکھنے کی اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر تعلیم نے کہا کہ حکومت نے وبائی امراض کی تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لینے کے بعد 50٪ حاضری کے ساتھ کلاسز شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر نے مزید کہا کہ اگر COVID-19 کی حالت میں مزید بہتری آئی تو 21 جون سے پرائمری کلاسز کا آغاز ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ “تمام اساتذہ کے لئے ویکسینیشن لازمی ہے۔”

کلاس 9 میں اور اس سے اوپر کی کلاسیں 7 جون سے شروع ہوگئی تھیں جس کے ساتھ ہی سخت کورونویرس اسٹینڈرڈ آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پیز) موجود تھا۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سنٹر (این سی او سی) نے اس سے قبل سی او آئی ڈی 19 کی بڑھتی ہوئی مثبتیت کے سبب صوبے کے تمام تعلیمی اداروں کو 7 جون تک بند رکھنے کی ہدایت جاری کی تھی۔

یہ امر قابل ذکر ہے کہ پاکستان بھر کے تعلیمی اداروں نے دوبارہ جسمانی کلاسز شروع کردی ہیں جبکہ اساتذہ اور معاون عملہ کو ترجیحی بنیادوں پر قطرے پلائے جارہے ہیں۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published.