نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے سربراہ اور منصوبہ بندی ، ترقی اور خصوصی اقدامات کے وزیر اسد عمر۔ اے ایف پی/فائل

وفاقی وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے منگل کو اعلان کیا کہ غیر ٹیکے لگانے والے افراد پر 15 اکتوبر سے پبلک ٹرانسپورٹ میں سفر کرنے پر پابندی ہوگی۔

اسد عمر نے میڈیا بریفنگ سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان بھی ان کے ہمراہ تھے۔

عمر نے بتایا کہ اگر اسکول کے اساتذہ اور عملے کو مکمل ویکسین نہ دی گئی تو انہیں 15 اکتوبر کے بعد کام کرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ 30 ستمبر کے بعد ہوائی سفر کے لیے ویکسینیشن لازمی ہے جبکہ تعلیم اور نقل و حمل کے شعبوں میں کام کرنے والوں کو اپنی خوراک تاریخ سے پہلے لینی چاہیے۔

عمر نے کہا کہ حکومت وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے اقدامات کر رہی ہے جس کے لیے ویکسینیشن اہم ہے ، انہوں نے مزید کہا کہ 15 ستمبر کے بعد شاہراہوں پر سفر کرنے کے لیے ایک خوراک کی ویکسینیشن ضروری ہے ، جبکہ 15 اکتوبر کے بعد کسی کو بھی اس کے استعمال کی اجازت نہیں ہوگی۔ ویکسینیشن کے بغیر موٹروے

عمر نے دیگر عوامی مقامات کے لیے بھی ہدایات بیان کیں:

شاپنگ مالز:

31 اگست سے غیر ٹیکے لگائے ہوئے لوگوں کو شاپنگ مالز میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جائے گی

30 ستمبر سے صرف وہ لوگ جو دونوں جابس لیں گے انہیں شاپنگ مالز میں داخل ہونے کی اجازت ہوگی۔

ہوٹل اور ریستوراں:

صرف وہی لوگ جنہوں نے ویکسین کا ایک جھٹکا لیا ہے انہیں 31 اگست سے ہوٹلوں میں داخل ہونے کی اجازت دی جائے گی جبکہ 30 ستمبر سے داخلے کے لیے مکمل ویکسینیشن لازمی ہوگی۔

شادی کی تقریبات۔

صرف وہی لوگ جنہوں نے ویکسین کے دونوں جاب لیے ہیں انہیں 30 ستمبر کے بعد شادی کی تقریبات میں گھر کے اندر یا باہر جانے کی اجازت ہوگی۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *