وزیراعظم عمران خان تربیلا ڈیم کے پانچویں توسیعی منصوبے کی سنگ بنیاد تقریب سے خطاب کر رہے ہیں۔ تصویر: اے پی پی
  • وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ان کی حکومت 10 سالوں میں 10 ڈیم بنائے گی۔
  • T-5 ہائیڈرو پاور پروجیکٹ تربیلا ڈیم کی زندگی میں اضافہ کرے گا تاکہ تلچھٹ کا مسئلہ حل ہو سکے۔
  • یہ پراجیکٹ کم لاگت اور ماحول دوست دوستانہ بجلی پیدا کرے گا۔

تربیلا: وزیر اعظم عمران خان نے تربیلا ڈیم کے پانچویں توسیعی منصوبے کا سنگ بنیاد رکھا ، سابقہ ​​حکومتوں کی طرف سے طویل المیعاد منصوبہ بندی کے فقدان پر افسوس کا اظہار کیا۔

ورلڈ بینک (ڈبلیو بی) اور ایشیائی انفراسٹرکچر انویسٹمنٹ بینک (اے آئی آئی بی) 2024 تک مکمل ہونے والے منصوبے کے لیے بالترتیب 390 ملین ڈالر اور 300 ملین ڈالر فراہم کر رہے ہیں۔

چیئرمین واٹر اینڈ پاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (واپڈا) لیفٹیننٹ جنرل (ر) مزمل حسین نے وزیراعظم کو منصوبے کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا۔

وزیراعظم کو بتایا گیا کہ T-5 ہائیڈرو پاور پراجیکٹ تربیلا ڈیم کی زندگی میں اضافہ کرے گا تاکہ تلچھٹ کے مسئلے کو حل کیا جا سکے اور پائیدار آبپاشی کے اخراج کو یقینی بنایا جا سکے۔

وزیر اعظم کو بتایا گیا کہ یہ منصوبہ مزید 1530 میگاواٹ کم لاگت اور ماحول دوست بجلی پیدا کرے گا۔ T-5 کی تکمیل سے تربیلا ڈیم کی نصب شدہ صلاحیت 4،888 میگاواٹ سے بڑھ کر 6،418 میگاواٹ ہو جائے گی۔

وزیراعظم نے تقریب کے موقع پر پائن کے درخت کا پودا بھی لگایا۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ ماحولیاتی تبدیلی کی وجہ سے اٹلی ، ترکی اور دیگر ممالک میں “بے مثال جنگل کی آگ” لگی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں اپنی توانائیاں صاف بجلی پیدا کرنے پر مرکوز کرنی چاہئیں جو ماحول کو نقصان نہ پہنچائیں۔

پی ایم خان نے کہا کہ داسو اور بھاشا ڈیموں کو وقت پر مکمل کرنا ملک کے لیے بہت اہم ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھاشا ڈیم کی تعمیر کا فیصلہ 1984 میں کیا گیا تھا۔ “بھاشا ڈیم کبھی مکمل کیوں نہیں ہوا؟ کیا کسی کے پاس ملک کے لیے وژن نہیں تھا؟”

انہوں نے کہا کہ ملک کو شدید مسائل کا سامنا ہے کیونکہ پاکستان نے کبھی طویل المیعاد منصوبہ بندی نہیں کی۔ پی ایم خان نے کہا کہ پاکستان بجلی زیادہ قیمت پر فروخت کرتا ہے کیونکہ وہ پانی کو پیدا کرنے کے لیے استعمال نہیں کرتا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان کو اس کی بڑی آبادی کی وجہ سے پانی کی کمی کا سامنا ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہم نے اگلے 10 سالوں میں 10 ڈیم بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر اعظم خان نے کہا کہ مہمند ڈیم 2025 تک اور بھاشا ڈیم 2028 تک مکمل ہو جائے گا۔

سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر ، وفاقی وزراء عمر ایوب خان ، چوہدری مونس الٰہی ، وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب۔ اس موقع پر گورنر کبیر پختونخوا شاہ فرمان اور وزیراعلیٰ محمود خان بھی موجود تھے۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *